(مارننگ پوسٹ)سوات میں نومبر کے مہینے میں ریکارڈ برف باری اور بارشوں سے خون جمادینے والی سردی میں اضافہ ہوا تو لذت اور ذائقے سے بھرپور گرما گرم سوات کے چپلی کباب کھانے سردی کو بھگانے اور جسم کو حرارت پہنچانے کے لئے شہریوں نے مینگورہ شہر کا رخ کرلیا۔ سوات ميں سردی بڑھتی ہی بھينس کے گوشت سے تيار کردہ اسپيشل چپلي کباب کي مانگ ميں بھی اضافہ ہوجاتا ہے،شہری دور دراز سے چپلي کباب کھانے مینگورہ پہنچ گئےنہ صرف وہ خود کھاتے ہے بلکہ اہلخانہ کے ليے بھي پارسل کرائے جاتے ہیں شہری کہتے ہیں کہ سردی کے موسم میں کباب کا بہت مزہ ہوتا ہے سردی بہت ہوتی ہے تو ہم کباب ہی کھاتے ہیں اس سے جسم گرم رہتا ہے۔

دوسری طرف ٹھنڈے موسم ميں جيب گرم ہوئي تو دکانداروں کے چہرے بھي کھل اٹھے۔کباب فروش کہتے ہیں کہ یہ کباب سوات کی سوغات ہےاس میں موٹا گوشت،مختلف مصالحے اور انڈے ڈالتے ہیں۔10قسم مختلف مصالحوں سے تيار ايک کباب کي قيمت ستر سے ايک سو چاليس روپے تک ہے